Sunday, 8 January 2017

تلاش



دل کو تیری ہی تلاش رہتی ہے 

تم یاد کرو نہ کرو مجهے تیری ہی یاد رہتی ہے

تمہیں نہ دیکهوں تو سکون کسی پل آتا
میری نظریں تم ہی کو ڈهونڈتے رہتے ہے

جانے میری آنکهوں کو کیا نشہ ہے اک بار تم کو دیکه لوں
تو سارا دن سکون سے گز جاتا ہے 

نہ دیکهوں تو کسی پل چین نہیں آتا
دل کو تیری ہی تلاش رہتی ہے

قائم بهرم رہے یوں سدا نہ دل ہو کبهی دل سے جدا
.. یہی دعا لب پے تنہا~ کے رہتی ہے

No comments:

Post a Comment